تازہ تر ین

وفاقی کا بینہ کا اجلاس ،مسئلہ کشمیرعالمی عدالت انصاف لیجانے کافیصلہ

اسلام آباد (این این آئی، مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی کابینہ نے کم قیمت مکانات منصوبے کیلئے 5 ارب روپے قرضہ فراہمی، پاک ترک سٹریٹجک اکنامک فریم ورک، کرسچن میرج اور طلاق بل 2019، گھریلو تشدد سے تحفظ اور روک تھام کے بل، نیشنل انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ سمیت متعدد فیصلوں کی منظوری دیدی ہے جبکہ معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ بزنس مین پر نیب کا خوف طاری ہے، کابینہ میں ڈسکس کیا گیا کہ کیسے باہر سے آنے والے بزنس مینوں کا یہ خوف دور کیا جائے؟ اگلی کابینہ میٹنگ میں بھی بات ہوگی، کرنٹ اکاو¿نٹ خسارہ میں کمی آئی ہے، وزیر اعظم نے بتایا کہ کیسے دیوالیہ معیشت کو پاو¿ں پر کھڑا کیا؟، مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نہ اٹھایا گیا تو پاکستان عالمی عدالت انصاف میں جائےگا، کشمیر پاکستان کا دفاعی حصار ہے، میڈیا بھارتی بربریت کیخلاف تسلسل سے آواز بلند کرنے کا سلسلہ جاری رکھے، وزیر اعظم ستائیس ستمبر کو اقوام متحدہ جنرل اسمبلی اجلاس سے خطاب کریں گے، چھبیس ستمبر کو مودی خطاب کریں گے، چھبیس ستمبر تک ہمیں کشمیر ایشو پر مسلسل بات کرتے رہنا ہوگا، جنرل قمر جاوید باجوہ کی مدت میں توسیع خطے میں امن کے تسلسل کے تحت ہوئی ہے۔ منگل کو وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں مختلف فیصلوں کی منظوری دی گئی۔ نجی ٹی وی کے مطابق کابینہ نے کاروباری طبقے اور بیوروکریٹس سے متعلق نیب قوانین پر نظرثانی کی ہدایت کی۔ وزیراعظم نے تمام وزارتوں کو ای بلنگ اور ای بڈنگ نظام متعارف کرانے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ بلز کی ادائیگی اور ٹھیکوں کی بولی مکمل طور پر آن لائن کی جائے۔ وفاقی کابینہ نے پاک ترک اقتصادی فریم ورک اور پاک ایران گیس پائپ لائن منصوبے سے متعلق ترامیم کی بھی منظوری دےدی۔ مراد سعید نے وزارت مواصلات کی ایک سالہ کارکردگی پر کابینہ کو بریفنگ دی اور وزیراعظم عمران خان نے وزارت مواصلات کی کارکردگی پر اعتماد کا اظہار کیا۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بھی مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر بریفنگ دی۔ کابینہ اجلاس کے بعد میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزیر اعظم کی زیر قیادت کابینہ کا تیرواں آئٹم ایجنڈہ ڈسکس ہوا، تین نمبر ایجنڈہ پر سب سے پہلے بات ہوئی۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزیر اعظم نے ہر کابینہ ممبر کو ہدایت کی تھی کہ عوامی فلاح کے لئے کام کریں، اس حوالے سے سیر حاصل بات کی گئی۔ فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ وزراءنے عوامی فلاح کے مختلف اقدامات پرائم منسٹر کو بتائے، منسٹر پارلیمنٹری افیئرز نے کابینہ میں بتایا کہ پارلیمنٹ میں پبلک کمپلینٹ سیل کی کارکردگی اچھی ہے۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ پرائم منسٹر پورٹل بھی ایک اچھا اقدام ثابت ہوا۔ انہوں نے کہا کہ پہاڑی علاقوں میں شمسی توانائی سے چلنے والی مصنوعات متعارف کرارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شجرکاری مہم میں پھلدار درختوں کی کاشت بڑھانے سے متعلق اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ پھلدار درختوں کی کاشت بڑھانے کیلئے نوجوانوں کو شامل کیا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ وزیر توانائی نے اپنی وزارت میں 120 ارب روپے کی ریکارڈ بچت سے متعلق آگاہ کیا، وزیر امور کشمیر نے سیاحت کے فروغ کے حوالے سے تجاویز پیش کیں۔ انہوں نے کہا کہ انفارمیشن اور ٹیکنالوجی وزارتوں کی طرف سے بھی پروپوزل آئے۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ سیاحوں کو نارتھ ایریاز میں سہولیات دینے کا فیصلہ بھی ہوا۔ معاون خصوصی نے کہا کہ یہ فیصلہ ہوا کہ لوگ اپنے گھروں میں ایک کمرہ رینٹ پر دیا کریں ۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کو اس حوالے سے قرضے بھی دئیے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اقدام سے مقامی افراد کو اضافی آمدن اور سیاحوں کو سستی رہائش میسر آسکے گی۔ فردوس عاشق اعوان نے بتایا کہ کابینہ کو بتایا گیا کہ گیس اور بجلی چوری سے بچنے کے لئے ای میٹرز کی طرف جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ فہمیدہ مرزا نے بتایا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں کے درمیان ہم آہنگی کے گیپ کو کیسے کم کیا؟ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے کابینہ کو بتایا کہ حکومت میں آنے کے بعد کیا چیلنجز تھے، وزیر اعظم نے بتایا کہ کیسے دیوالیہ معیشت کو پاو¿ں پر کھڑا کیا؟۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے بتایا کہ کرنٹ اکاو¿نٹ خسارہ میں کمی آئی ہے، وزیر اعظم نے بیرونی قرضوں کے حوالے سے بھی آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ انوسٹمنٹ فرینڈلی پالیسیز بھی کابینہ کے ساتھ شیئر کی گئیں، وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ ون ونڈو آپریشن کے اوورسیز پاکستانیوں کو سرمایہ کاری کی سہولیات دی جائیں۔ انہوں نے کہا کہ روزگار بڑھانے کیلئے صنعتوں کا فروغ ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں سر مایہ کاری بڑھانے میں سمندر پار پاکستانی اہم کردار ادا کرسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کابینہ نے کمیٹی برائے نجکاری کے آٹھ اگست کے فیصلوں کی توثیق کی، معاون خصوصی نے کہا کہ ترکی کے ساتھ اکنامک فریم ورک کی منظوری دی گئی اس میں نو جوائنٹ ورکنگ گروپ بنائے گئے ہیں، ان گروپس کو منسٹر اکنامک افیئر ہیڈ کریں گے۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ڈیفنس اور کلوز کو آپریشن بھی ان ورکنگ گروپس کے ٹی او آرز کا حصہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاک ترک آزادانہ تجارتی معاہدہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے، دونوں ملکوں کے درمیان مشترکہ منصوبے کرنے کا بھی جائزہ لیا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ سی پیک کے تحت وسط ایشیائی ریاستوں اور ترکی کے ذریعے یورپ سے تجارت بڑھائینگے۔ انہوں نے کہا کہ کم قیمت مکانات منصوبے کیلئے 5 ارب روپے قرضہ فراہمی کی منظوری دی گئی، مکانات کی تعمیر کیلئے قرضے بلاسود فراہم کیے جائیں گے۔ معاون خصوصی نے کہا کہ کرسچن میرج اینڈ ڈائیورس بل کی پرسپل اپروول دی گئی، ڈومیسٹک وائیلنس اور پروٹیکشن بل کی بھی منظوری دی گئی۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ سی سی ایل سی کے فیصلوں کی بھی توثیق کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ نیشنل انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کی منظوری دی گئی۔ انہوں نے کہا کہ مراد سعید نے بتایا کہ ایک سال میں سات ارب روپے کی ریکوری کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ کابینہ کو بتایا گیا ڈرائیونگ لائسنسگ اتھارٹی مڈل ایسٹ میں معاہدے کرےگی۔ انہوں نے بتایا کہ بزنس مین کا اعتماد بڑھانے کا معاملہ بھی زیر بحث آیا، بزنس مین پر نیب کا خوف طاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ کابینہ میں ڈسکس کیا گیا کہ کیسے باہر سے آنے والے بزنس مینوں کا یہ خوف دور کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ اگلی کابینہ میٹنگ میں اس پر بھی بات ہوگی۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ کابینہ میں مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورت حال پر بھی بات ہوئی ہے، وزیر اعظم نے مقبوضہ کشمیر صورت حال پر کابینہ کو اعتماد میں لیا۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ مودی ہٹلر بن کر اپنی خواہشات کی تکمیل کرنا چاہتا ہے، وزیر اعظم نے کابینہ کو ہدایت کی تمام وزیر اور میڈیا کشمیر ایشو کو زندہ رکھیں۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نہ اٹھایا گیا تو پاکستان آئی سی جے میں جائےگا۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم ستائیس ستمبر کو اقوام متحدہ جنرل اسمبلی اجلاس سے خطاب کریں گے، چھبیس ستمبر کو مودی خطاب کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ آج سے چھبیس ستمبر تک ہمیں کشمیر ایشو پر مسلسل بات کرتے رہنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ جنرل قمر جاوید باجوہ کی مدت میں توسیع خطے میں امن کے تسلسل کے تحت ہوئی ہے۔ معاون خصوصی نے کہا کہ اسلامی ممالک کے مفادات معاشی ہیں، کشمیر ایشو پر ہندوستان کو سپورٹ کرنا کشمیر کاز کی مخالفت ہے۔ انہوں نے کہا کہ مظلوم کشمیریوں کی جنگ عالمی فورمز پر موثر انداز میں لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ وزیرِ اعظم عمران خان کہا ہے کہ سیاسی ویژن کو عملی جامہ پہنانے کے لئے ضروری ہے کہ سول سروس قابل اور پرعزم افرادی قوت پر مشتمل ہو جو عوامی خدمت کے جذبے سے سرشار ہو۔ انہوں نے ہدایت کی کہ سول سروسز ریفارمز کے عمل کو تیز کیا جائے۔ وزیرِ اعظم عمران خان سول سروس اصلاحات میں پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاس سے خطاب کررہتے تھے۔ وزیرِ اعظم عمران خان کی زیر صدارت سول سروس اصلاحات میں پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاس ہوا۔ اجلاس میں وزیرِ تعلیم شفقت محمود، مشیر برائے ادارہ جاتی اصلاحات و کفایت شعاری ڈاکٹر عشرت حسین، مشیر برائے اسٹیبلشمنٹ محمد شہزاد ارباب، سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ، سیکرٹری خزانہ، سیکرٹری کابینہ اور دیگر سینئر افسران شریک ہوئے۔ مشیر برائے ادارہ جاتی اصلاحات ڈاکٹر عشرت حسین کی وزیرِ اعظم کو سول سروس اصلاحات میں اب تک کی پیش رفت اور مستقبل کے لائحہ عمل پر تفصیلی بریفنگ دی۔ وزیراعظم عمران خان نے کشمیر کے معاملے پر دنیا کے رہنماﺅں سے رابطوں پر کابینہ کو اعتماد میں لے لیا اور کہا پاکستان کشمیریوں کو مشکل کی گھڑی میں تنہا نہیں چھوڑے گا جبکہ بے باک موقف اپنانے پر کابینہ نے وزیراعظم عمران خان کی تعریف کی۔ وفاقی کابینہ نے کاروباری طبقے اور بیوروکریٹس سے متعلق نیب قوانین پر نظرثانی کی ہدایت کردی۔ وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں مختلف فیصلوں کی منظوری دی گئی۔ کابینہ نے کاروباری طبقے اور بیورو کریٹس سے متعلق نیب قوانین پر نظرثانی کی ہدایت کی۔ وزیراعظم نے تمام وزارتوں کو ای بلنگ اور ای بڈنگ نظام متعارف کرانے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ بلز کی ادائیگی اور ٹھیکوں کی بولی مکمل طور پر آن لائن کی جائے۔ وفاقی کابینہ نے پاک ترک اقتصادی فریم ورک اور پاک ایران گیس پائپ لائن منصوبے سے متعلق ترامیم کی بھی منظوری دے دی۔ مراد سعید نے وزارت مواصلات کی ایک سالہ کارکردگی پر کابینہ کو بریفنگ دی اور وزیراعظم عمران خان نے وزارت مواصلات کی کارکردگی پر اعتماد کا اظہار کیا۔



خاص خبریں


punjab police

سائنس اور ٹیکنالوجی


mobile

تازہ ترین ویڈیوز



HEAD OFFICE
Khabrain Tower
12 Lawrance Road Lahore
Pakistan

Channel Five Pakistan© 2015.
© 2015, CHANNEL FIVE PAKISTAN | All rights of the publication are reserved by channelfivepakistan.tv