تازہ تر ین
Asif-Zardari

مخالفین سے 18 ویں ترمیم اور وسائل کی جنگ لڑیں گے ، نیا بنگلہ دیش نہیں بننے دینگے : آصف زرداری

ٹنڈو آدم، ٹنڈو الہیار (مانیٹرنگ ڈیسک، آن لائن) پیپلز پارٹی کے شریک چیئر مین آصف زرداری نے کہاہے کہ نیا بنگلہ دیش نہیں بننے دیں گے ، یہ بیوقوف ہیں ، ان کی ٹانگیں ویسے ہی ڈگمگا جاتی ہیں ،مخالفین کے ساتھ پاکستان کے وسائل کی جنگ لڑ رہے ہیں، اپنا حق لینے کیلئے لڑیں گے۔ تفصیلات کے مطابق ٹنڈو الہٰیار میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے آصف زرداری نے کہا کہ میں نے گڑھی خدا بخش کی دھرتی کی قسم کھائی ہے ، ہمیشہ ذوالفقار علی بھٹو اور بے نظیر بھٹو کے قول پر چلتا رہوں گا ، جس کو یہ پاکستان کہتے ہیں ، وہ ان کی جانب سے نہیں بنایا تھا ، پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے مکالمہ کرکے بنایا تھا جو میرے بزرگوں کے سکول میں پڑھے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اب ہم کوئی بنگلہ دیش نہیں بننے دیں گے اور اپنے حق کیلئے لڑیں گے ، پنجاب ، بلوچ اور پشتون ہمارے ساتھ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ بیوقوف ہیں ، ان کی ٹانگیں ویسے ہی ڈگمگا کرجاتی ہیں ، اتنا ڈرنے کی بات نہیں ہے جتنا یہ ڈرتے ہیں ،بجٹ ہم نے بھی بنایا تھا ، سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں سو فیصد اضافہ کیا تھا کیونکہ ہمیں غریبو ں کی سوچ ہوتی ہے جبکہ ان کو اپنے محلات کا سوچ ہوتی ہے۔ سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ نیا بنگلہ دیش نہیں بننے دیں گے، تمام صوبے ہمارے ساتھ ہیں، یہ پاکستان کے وسائل کی جنگ ہے اور ہم یہ جنگ لڑتے رہیں گے،مولانا ابوالکلام آزاد پہلے سے پلان بنائے بیٹھے تھے پاکستان توڑنا ہے اور بعد میں بنگلہ دیش بنا لیکن اب ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے، ہمارا وزیراعلیٰ سندھ کنجوس آدمی ہے یہ پیشے کے اعتبار سے بینکر ہیں اور بینکر سے جب پیسہ مانگا جائے تو کہتا ہے کہ میرے پاس پیسے نہیں ہیں،ہم نے گڑھی خدابخش کی مٹی کی قسم کھائی ہوئی ہے کہ لڑتے رہیں گے۔بی بی کے قول پر چلتے رہیں گے۔۔ ٹنڈو آدممیں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم اپنے حقوق کے لیے لڑتے آرہے ہیں اور یہ جنگ لڑتے رہیں گے، یہ پاکستان آج کے لوگوں نے نہیں بنایا بلکہ ہمارے بزرگوں نے بنایا اور یہ ملک جنگ سے نہیں ڈائیلاگ کے ذریعے حاصل کیا گیا۔سابق صدر نے کہا کہ پاکستان بننے کے بعد سوچی سمجھی سازش کے تحت خون ریزی کی گئی اور نیا بنگلہ دیش بنایا گیامولانا ابوالکلام آزاد 30 برس قبل پلان بنائے بیٹھے تھے کہ پاکسان کو توڑنا ہے اور بعد میں بنگلہ دیش بنا لیکن اب کوئی بنگلہ دیش نہیں بننے دیں گے۔ زرداری نے کہا کہ یہ اٹھارہویں ترمیم پر ڈھونگ رچائے بیٹھے ہیں اب سول ایوی ایشن کا کنٹرول بھی اسلام آباد منتقل کیا جارہا ہے قائد اعظم محدم علی جناح میرے بزرگوں کے اسکول میں پڑھے انہوں نے مذاکرات سے پاکستان حاصل کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ وہ سندھی میں تقریر اس لیے نہیں کرتے کیونکہ سننے والوں کو سمجھ نہیں آتی۔ جنگ ان کی ہم سے ہمارے وسائل پر ہے بلکہ پورے پاکستان کے وسائل پر ان سے جنگ ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم تو لڑتے رہے ہیں اور عوام کے حقوق کے لیے جنگ جاری رکھیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ ڈرنے کی کوئی بات نہیں ہے۔ ہم نے بھی یہی بجٹ چلایا تھا اور سب کی تنخواہوں میں اضافہ کیا تھا کیونکہ ہماری سوچ غریب عوام ہے۔ہمین عوام کی فکر ہے اور ان کو اپنے محلات کی فکر ہے 1988 ءکے بعد سندھ بہت ترقی کر چکا ہے ہمارا وزیراعلیٰ سندھ کنجوس آدمی ہے کیونکہ پیشے کے اعتبار سے بینکر ہے او ربینکر سے جب پیسے مانگے جائیں تو وہ کہتا ہے کہ میرے پاس پیسے نہیں ہیں۔ سابق صدر نے کہا کہ ہم نے گڑھی خدابخش کی مٹی کی قسم کھائی ہوئی ہے کہ لڑتے رہیں گے۔بی بی کے قول پر چلتے رہیں گے۔ یہ بیوقوف ہیں،ان کی ٹانگیں ڈگمگا رہی ہیں، ہم نے ججز، فوج، ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں اسی بجٹ میں 100فیصد اضافہ کیا،پیپلزپارٹی کی سوچ غریبوں کی ہے،جبکہ ان کی محلوں کی سوچ ہے۔ہم اپنے حق کیلئے لڑیں گے ۔اس حق میں پنجاب ، جنوبی پنجاب ، سندھ ، خیبرپختونخواہ اور بلوچستان ساتھ ہیں۔ انہوں نے کہا کہبی بی کہا کرتی تھیں کہ سندھ جاتی ہوں تووہاں کے غریب کی نوکری کی آواز مجھے پیٹ سے آتی ہے۔سندھ والے پیٹ سے بولتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سندھ ترقی کررہا ہے۔



خاص خبریں


ziazia shahid

سائنس اور ٹیکنالوجی



تازہ ترین ویڈیوز



HEAD OFFICE
Khabrain Tower
12 Lawrance Road Lahore
Pakistan

Channel Five Pakistan© 2015.
© 2015, CHANNEL FIVE PAKISTAN | All rights of the publication are reserved by channelfivepakistan.tv