تازہ تر ین

”کوئٹہ گلیڈی ایٹر “ اور ”پشاورزلمی“ کھیلے, لیکن جیتا پورا” پاکستان“

لاہور (خصوصی نامہ نگار‘کرائم رپورٹر) پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کی اختتامی تقریب میں دہشت گردی کے خلاف قربانیاں دینے والے پاک فوج کے جوانوں کو زبر دست خراج عقیدت پیش کیا گیا اور پاک فوج کے پیرا ٹروپرز نے قذافی اسٹیڈیم میں اترنے کا شاندار مظاہرہ کیا،گلوکار علی ظفر ،فاخر اور علی عظمت سمیت دیگر گلوکاروں نے اپنی شاندار پرفارمنس سے شائقین کر کٹ کو جھومنے پر مجبور کردیا۔پشاور زلمی کے غیر ملکی کر کٹرز ڈیرن سمی اور مارلن سیمولز اختتامی تقریب کے دروان گراﺅنڈ میں اکر جھومتے رہے اور اپنے مداحوں سے سیلفیاں بناتے رہے ۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان سپر لیگ کے دوسرے ایڈیشن کی اختتامی تقریب کا باقاعدہ آغاز دہشت گردی کے خلاف اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے پاک فوج کے شہداء کو خراج عقیدت سے کیا گیا جس کے لئے پاک فوج کے پیرا ٹروپرز نے قذافی اسٹیڈیم میں اترنے کا شاندار مظاہرہ کیا۔پاک فوج کے شہداء کو خراج عقیدت پیش کرنے کے بعد گلوکار علی ظفر نے پی ایس ایل کا ٹائٹل سانگ پیش کر کے عوام کو جھومنے پر مجبور کردیا۔ علی ظفر کے بعد گلوکار فاخر نے اپنا مشہور زمانہ گانا ’تیرے بنا دل نا لگے‘ پیش کر کے شائقین کرکٹ کا لہو گرمایا۔ گلوکاروں کی شاندار پرفارمنس کے بعد دونوں ٹیموں کے کھلاڑی گراو¿نڈ میں آئے اور ہاتھ ہلا کر شائقین کرکٹ کے نعروں کا جواب دیا۔ کھلاڑیوں نے مداحوں کے ساتھ سیلفیاں بھی بنوائیں۔ تیسرے پلے آف میں کراچی کنگز کے خلاف زخمی ہونے والے شاہد آفریدی گراو¿نڈ میں پہنچے تو پورا گراو¿نڈ ’لالہ لالہ‘ کے نعروں سے گونج اٹھا جب کہ پشاور زلمی کے کپتان ڈیرن سیمی پاکستانی فنکاروں کی پرفارمنس پر جھومتے نظر آئے۔ پی ایس ایل کی اختتامی تقریب کے لئے قذافی اسٹیڈیم کو دلہن کی طرح سجایا گیا جب کہ سیکیورٹی بھی انتہائی سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔ پاکستان سپر لیگ کے انتہائی اہم میچ کے موقع پر سیکیورٹی اداروں کی طرف سے انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں، کسی بھی نا خوشگوار واقعے سے نمٹنے کے لیے ہیلی کاپٹر کے ذریعے فضائی نگرانی کا عمل بھی جاری رہے گا۔ ہاکی اسٹیڈیم میں 25 بستروں کا عارضی ہسپتال بھی بنا دیا گیا ہے۔ دوسری جانب پاکستان سپر لیگ سیزن IIکے فائنل میچ میں پشاور زلمی نے یکطرفہ مقابلے کے بعد کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کو 58رنز سے شکست دیدی ،پشاور ز لمی نے پہلے کھیلتے ہوئے مقررہ 20اوورز میں6کھلاڑیوں کے نقصان پر 148رنز بنائے جبکہ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی پوری ٹیم 16.3اوورزمیں 90 رنز بنا کر ہمت ہار گئی ۔کوئٹہ گلیڈی ایٹرزکے کپتان سرفراز احمد نے ٹاس جیت کرپشاورزلمی کو پہلے کھیلنے کی دعوت دی ۔پی ایس ایل کے دوسرے سیزن کی واحد سنچری بنانے والے کامران اکمل نے آغاز سے ہی جارحانہ انداز اپنایا اور پہلے ہی اوور میں تین چوکے لگائے جبکہ دوسرے اوور میں ملان نے بھی ایک چھکا اور چوکا لگا کر اپنے عزائم ظاہر کر دئیے تاہم جب ٹیم کا سکور پانچویں اوور میں 42 رنز تک پہنچا تو ملان کو ریاض امرت نے بولڈ کر دیا۔اسکے بعدمارل سیموئلزبیٹنگ کے لئے میدان میں آئے ،مارل سیموئلزاورکامران اکمل کے مابین 40رنزکی پاٹنرشپ ہوئی ۔پشاور زلمی کی دوسری وکٹ82رنزپرگری جب کامران اکمل6چوکوں اورایک چھکے کی مددسے 40رنزبناکرحسان خان کی گیندپرایل بی ڈبلیوآو¿ٹ ہوگئے۔اگلے ہی اوور میں نواز نے مارل سیموئلز کو بولڈ کر کے اپنی ٹیم کو تیسری کامیابی دلوا دی سیموئلزنے19رنزبنائے۔چوتھی وکٹ12ویں اوور میں86رنزپرگری جب حسان خان کی گیندپرخوشدل شاہ وکٹوں کے پیچھے سٹمپ آو¿ٹ ہوئے ۔ حسن علی نے اگلے ہی اوور میں خوشدل شاہ کو صرف ایک رنز پر پویلین واپس بھیجا تو شاہد آفریدی کی جگہ ٹیم میں شامل کیے جانے والے افتخار احمد بیٹنگ کے لیے میدان آئے لیکن تمام تر کوششوں کے باوجود وہ بڑی شارٹس لگانے میں ناکام رہے جس کی بدولت ابتدائی اوور میں اچھا آغاز کرنے کے باوجود پشاور زلمی بڑا اسکور کرنے میں ناکامی رہی جبکہ ایمرٹ نے پہلے محمد حفیظ کو 12 رنز پر آو¿ٹ کیا اور اگلی ہی گیند پر افتخار احمد کو بھی پویلین کی راہ دکھا دی ۔ انہوں نے 21 گیندوں پر 14 رنز بنائے۔پشاور کی ٹیم کو 148کے سکور تک پہنچانے میں کپتان ڈیرن سیمی کی آخری اوورز میں جارحانہ اننگز نے اہم کردار ادا کیا جنہوں نے11گیندوں میں تین چھکوں اور ایک چوکے کی مدد سے 28 رنز بنائے۔ڈیرن سیمی 28اورجارڈن8رنزبناکرناٹ آو¿ٹ رہے۔کوئٹہ گلیڈی ایٹرزکی جانب سے ریاد ایمرٹ نے 3، حسن علی نے 2 جبکہ محمد نواز نے ایک کھلاڑی کوآو¿ٹ کیا۔کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی جانب سے احمد شہزاد اور مورنی وین وک نے اننگز کا آغاز کیا لیکن وین وک دوسرے ہی اوور میں رن آﺅٹ ہوکر پویلین واپس لوٹ گئے۔ تیسرے اوور میں پشاور زلمی کے کپتان ڈیرن سیمی نے حسن علی کی گیند پر انعام الحق کا ایک آسان کیچ چھوڑ کر دوسری وکٹ حاصل کرنے کا موقع گنوا دیا۔تاہم اگلے ہی اوور میں اصغر نے انعام کو مڈ آف باﺅنڈری پر کیچ کروا کے اس غلطی کا ازالہ کر دیا۔حسن علی کو پہلی وکٹ احمد شہزاد کی ملی جنہیںخوشدل شاہ نے کیچ کیا اور وہ صرف ایک رن ہی بنا سکے۔کپتان سرفراز احمد چند اچھی شاٹس کھیلنے کے بعد محمد حفیظ کی گیند پرآﺅٹ ہو گئے، انہوں نے دس گیندوں پر پانچ چوکوں کی مدد سے 22 رنز بنائے۔سرفراز احمد نے اپنی جارحانہ بلے بازی کو جاری رکھتے ہوئے محمد حیفظ کو لگاتار دو چوکے لگائے اور تیسری گیند پر اونچا شاٹ کھیلنے کے لیے آگے بڑھے مگر کامران اکمل نے گیند کو وکٹ دے مارا اور اسٹمپ آو¿ٹ کرکے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کو ناقابل تلافی نقصان پہنچادیا۔ سعد نسیم بھی زیادہ مزاحمت نہ کرپائے اور صرف 4 رنز بنا کر پولین واپس لوٹ گئے، وہاب ریاض نے سعد کی وکٹ حاصل کی۔چھٹی وکٹ72رنزپرگریںجب شین اروائن 24 رنزکر اصغرعلی کی گیند پر بولڈ ہوئے، اگلی ہی گیند پر محمد نواز اسٹیمپ آو¿ٹ ہوئے۔ آٹھویں وکٹ81 رنز پرگری جب انور علی20 رنز بنا کر جارڈن کی گیند پر افتخاراحمدکے ہاتھوں کیچ آو¿ٹ ہوئے۔ نویں وکٹ88 رنز پرگری جب حسان خان 28 رنز بنا کر وہاب ریاض کی گیند پر سیمی کے ہاتھوں کیچ آو¿ٹ ہوئے۔ آخری وکٹ 90رنزپرگری جب ذوالفقار بابر ایک رن بناکرحسن علی کی گیند پر بولڈ ہوئے۔ پشاور زلمی کے محمد اصغر نے3، حسن علی اور وہاب ریاض نے 2,2 محمد حفیظ، جارڈن نے ایک ایک کھلاڑی کوآو¿ٹ کیا۔ پشاور زلمی کے کھلاڑیوں اور مینجمنٹ نے فائنل جیتنے پر خوب جشن منایا اور کھلاڑیوں نے ایک دوسرے کو گلے مل کر مبارکباد دی۔ پشاور زلمی کی کامیابی کی خوشی میں بھی سٹیڈیم میں موجود سپورٹرز نے بھی شدید خوشی کا اظہار کرتے ہوئے بھنگڑے ڈالے۔ فائنل کی اختتامی تقریب میں انتظامیہ اور سپانسرز کی جانب سے کھلاڑیوں پر انعامات کی بارش کردی گئی۔اختتامی تقریب میں سب سے زیادہ انعامات پشاور زلمی کے وکٹ کیپر اوپننگ بلے باز کامران اکمل نے حاصل کیے۔ انہیں بہترین کیپر کا 20 ہزار ڈالر، بہترین بلے باز کا 20 ہزار ڈالر اور پلیئر آف ٹورنامنٹ کا 25 ہزار ڈالر انعام دیا گیا۔پشاور زلمی اور کوئٹہ گلیڈیٹرز کے مابین کھیلے گئے فائنل میچ کے بہترین کھلاڑی کا انعام فاتح کپتان ڈیرن سیمی کو 4500 ڈالر دیا گیا۔ ڈیرن سیمی کو مہمانان خصوصی کی جانب سے پگڑی بھی پہنائی گئی۔ علاوہ ازیں چیئرمین پی ایس ایل نجم سیٹھی نے پشاور زلمی کے کپتان ڈیرن سیمی کو چیمپیئن بننے پر انعامی رقم 5 لاکھ ڈالر کا چیک دیا۔کوئٹہ گلیڈیٹرز کے کپتان سرفراز احمد کو سپرٹ آف کرکٹ 20 ہزار ڈالر جبکہ کراچی کنگز کے سہیل خان کو سب سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے پر 20 ہزار ڈالر کے انعام سے نوازا گیا۔ تقریب کے دوران قومی ٹیسٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق کو ا?ئی سی سی کی جانب سے دیا جانے والا سپرٹ ا?ف کرکٹ ایوارڈ بھی دیا گیا جو چیئرمین پی سی بی شہریار خان نے ان کے حوالے کیا۔



خاص خبریں


metro
saqib nisar

سائنس اور ٹیکنالوجی



تازہ ترین ویڈیوز



HEAD OFFICE
Khabrain Tower
12 Lawrance Road Lahore
Pakistan

Channel Five Pakistan© 2015.
© 2015, CHANNEL FIVE PAKISTAN | All rights of the publication are reserved by channelfivepakistan.tv